ٹرین میں آگ کیسے لگی ؟ عینی شاہد نے سب کچھ بتا دیا

رحیم یار خاں (نیوز ڈیسک) آج کراچی سے لاہور جانے والی تیز گام ایکسپریس میں آگ لگنے کا افسوسناک واقعہ پیش آیا تھا جس سے ٹرین کی تین بوگیوں میں آگ بھڑک اُٹھی جس میں اب تک کی اطلاعات کے مطابق 70 مسافر جاں بحق ہو چکے ہیں جبکہ کافی تعداد میں زخمی بھی ہیں وفاقی وزیر یلوے

وفاقی وزیر یلوے شیخ رشید احمد اور ریلوے انتظامیہ کے مطابق ٹرین میں آگ سلنڈر پھٹنے سے لگی جو ٹرین کے اندر موجود تھا جس میں تبلیغی جماعت کے مسافر ناشتہ تیار کر رہے تھے جبکہ ہلاک شدگان میں بھی زیادہ تر تعداد بھی تبلیغی جماعت کے مسافروں کی تھی تاہم ریلوے کے اس سانحے کے ایک عینی شاہد نے کہا ہے کہ ٹرین کی ایک بوگی سے رات کو ہی بُو آرہی تھی جس پر اُنہوں نے ٹرین انتظامیہ کو مطلع کیا تھا تاہم کسی نے کوئی نوٹس نہ لیا یہ واقع شارٹ سرکٹ کی وجہ سے پیش آیا ہے جس کی وجہ سے ٹرین کی تین جل کر راکھ ہو گئیں واقعہ کی اطلاع ملتے ہی وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید کو کیسے پتہ چل گیا کہ یہ سلنڈر دھماکہ ہے جبکہ پاک فوج کے جوان لوگوں کی مدد کے لئے فوری موقع پر پہنچ گئے وزیر اعظم عمران خاں نے اس افسوسناک واقعہ کی فوری انکوائری کا حکم جاری کر دیا ہے وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید احمد کی جانب سے اس واقعہ میں جاں بحق ہونے والے مسافروں کےلئے 15 لاکھ روپے فی کس جبکہ زخمیوں کے لئے 5 لاکھ روپے فی کس امداد کا اعلان کیا گیا ہے تاہم اس افوسناک واقعہ کی حقائق پر مبنی انکوائری ضروری ہے تاکہ اصل تہہ تک پہنچا جا سکے۔

Share

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *