Breaking News

خبردار !!! اس کو کھانے سے گریز کریں۔۔۔۔ کرونا کے مریض وائرس سے نہیں بلکہ کس چیز سے مر رہے ہیں ؟

اسلام آباد(نیوز ڈیسک) لاہور پر کورونا قہر بن کر ٹوٹ پڑا ۔کورونا وائرس خوفناک صورت اختیار کر گیا، لاہور میں چوبیس گھنٹوں کے دوران کورونا سے 50 اموات ہوئیں جبکہ 934 نئے کیسز سامنے آگئے، 93 روز کے دوران اموات کی مجموعی تعداد 380 اور کیسز کی تعداد 27 ہزار سے تجاوز کر گئی۔ شہر کے ہسپتالوں میں شدید علیل مریضوں کی تعداد بڑھ گئی، 330 مریض انتہائی نگہداشت وارڈز میں داخل، 130 وینٹی لیٹرز پر ہیں۔

شہر کے سرکاری اور پرائیویٹ ہسپتالوں میں کورونا کے 718 مریض زیر علاج ہیں، جن میں سے 330 مریض آئی سی یو میں داخل ہیں اور 130 وینٹی لیٹرز پر ہیں۔ پنجاب بھر میں چوبیس گھنٹے کے دوران مجموعی طور پر 1537نئے کیس سامنے آئے اور 62 اموات کی تصدیق کی گئی ہے، پنجاب میں کورونا وائرس سے اب تک 1031 اموات ہوچکی ہیں اور کیسز کی مجموعی تعداد 54,138 ہو گئی ہے۔ صوبائی وزیر ٹرانسپورٹ آزاد جموں کشمیر ناصر ڈار بھی کورونا وائرس کا شکار ہوگئے، ناصر ڈار نے خود کو اپنی رہائشگاہ میں قرنطینہ کر لیا، ناصر ڈار کا کورونا ٹیسٹ مثبت آنے کے بعد ان کے اہلخانہ کے کورونا ٹیسٹ بھی کرائے گئے جو نیگٹو آئے ہیں۔ مریلوے کے 15سے زائد ملازمین بھی کورونا کا شکار ہو گئے۔ دوسری جانب اداکارہ صبا حمید کی لوگوں کو سنا مکی کے استعمال سے گریز کرنے کی اپیل، سوشل میڈیا پر جاری کیے گئے پیغام میں اداکارہ نے کہا کہ کرونا وائرس کے مریض اس جڑی بوٹی کا کسی صورت استعمال نہ کریں ورنہ پانی کی کمی کا شکار ہو کر موت کے منہ میں جا سکتے ہیں۔ تفصیلات کے مطابق کچھ روز سے سوشل میڈیا پر کرونا وائرس کے علاج کیلئے سنا مکی نامی جڑی بوٹی کے استعمال کے حوالے سے کافی باتیں وائرل ہوئیں۔

بنا کسی تحقیق کے کچھ عناصر نے یہ بات عام کر دی کہ سنا مکی کا استعمال ہی کرونا وائرس کا علاج ہے۔ تاہم ڈاکٹرز اور ماہرین نے ایسے تمام دعوے مسترد کر دیے۔ ڈاکٹرز کا کہنا ہے کہ ایسی کوئی طبی تحقیق موجود نہیں جو یہ ثابت کر سکے کہ سنا مکی سے کرونا وائرس کا علاج ممکن ہے۔سنا مکی سے کرونا وائرس کا علاج تو ممکن نہیں، لیکن اس کے استعمال سے کرونا مریض کی زندگی خطرے میں پڑ سکتی ہے۔اداکارہ کا کہنا ہے کہ کرونا مریضوں کیلئے سنا مکی کا استعمال خطرناک ہے۔ سنا مکی کے استعمال سے کرونا مریض پانی کی کمی کا شکار ہو سکتے ہیں اور اس باعث ان کی موت بھی واقع ہو سکتی ہے۔ تندرست لوگ قبض کے علاج کیلئے سنا مکی کا استعمال کر سکتے ہیں، تاہم وہ بھی دن میں صرف ایک مرتبہ اور انتہائی کم مقدار میں۔میڈیکل سائنس نے اب تک یہ بات ثابت نہیں کی کہ سنا مکی کرونا وائرس کا علاج ہے، بلکہ اس کا استعمال مسلسل موشن کے مسئلے کا باعث بن سکتا ہے۔ اس سے قبل لاہور کے میو ہسپتال میں زیر علاج ایک کرونا مریض کا ویڈیو پیغام بھی سامنے آیا تھا جس میں اب کی جانب سے لوگوں کو تلقین کی گئی تھی کہ سنا مکی کا استعمال نہ کیا جائے۔ سنا مکی کے استعمال سے مسلسل موشن آتے ہیں اور انسان بیٹھنے کے قابل بھی نہیں رہتا۔

About Admin

Check Also

کیاواقعی ٹیلی نارپاکستان میں اپنےآپریشنز بند کررہاہے؟پی ٹی اے کا ردعمل آ گیا

اسلام آباد(نیوز ڈیسک) پاکستان ٹیلی کمیونیکشن اتھارٹی (پی ٹی اے) نے مشہور ٹیلی کام کمپنی”ٹیلی …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *