Breaking News

کیا لوگوں کے سامنے بیوی کو گلے لگانا جائز ہے؟

جزاک اللہ ۔۔۔ جب حضور صلی اللّٰہ علیہ وسلم حضرت صفیہ رضی اللّٰہ عنہا کو لے کر مدینہ منورہ تشریف لاۓ۔ انہیں اپنے حرم میں شریک فرمایا,اور راستے میں ان سے زفاف کیا،تو حضرت عائشہ رضی اللّٰہ عنہا کہنے لگیں،میں نے لباس بدلا اور دیکھنے کی لیے نکلی آپ نے مجھے پہچان لیا۔

آپ نے میری طرف رخ کیا،میں پلٹ گئی،آپ نے تیزی سے مجھے آ لیا اور سینے سے لگا کر فرمایا،تم نے اسے کیسی پایا؟میں نے عرض کیا،یہودی کی بیٹی یہودن ہی تو ہے،یعنی قیدی ہے. (ابن ماجہ)1980 – حَدَّثَنَا أَبُو بَدْرٍ عَبَّادُ بْنُ الْوَلِيدِ قَالَ: حَدَّثَنَا حَبَّانُ بْنُ هِلَالٍ قَالَ: حَدَّثَنَا مُبَارَكُ بْنُ فَضَالَةَ، عَنْ عَلِيِّ بْنِ زَيْدٍ، عَنْ أُمِّ مُحَمَّدٍ، عَنْ عَائِشَةَ، قَالَتْ: لَمَّا قَدِمَ رَسُولُ اللَّهِ صَلَّى اللهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ الْمَدِينَةَ وَهُوَ عَرُوسٌ بِصَفِيَّةَ بِنْتِ حُيَيٍّ، جِئْنَ نِسَاءُ الْأَنْصَارِ فَأَخْبَرْنَ عَنْهَا، قَالَتْ: فَتَنَكَّرْتُ وَتَنَقَّبْتُ فَذَهَبْتُ، فَنَظَرَ رَسُولُ اللَّهِ صَلَّى اللهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ إِلَى عَيْنِي فَعَرَفَنِي، قَالَتْ: فَالْتَفَتَ، فَأَسْرَعْتُ الْمَشْيَ، فَأَدْرَكَنِي فَاحْتَضَنَنِي، فَقَالَ: «كَيْفَ رَأَيْتِ؟» قَالَتْ: قُلْتُ: أَرْسِلْ، يَهُودِيَّةٌ وَسْطَ يَهُودِيَّاتٍ راوی علی بن زید کے متعق :امام احمد نے ضعیف کہا ہے۔ یحیی بن معین کہتے ہیں کہ قوی نہیں اور ایک قول ہے کہ یہ کچھ حیثیت والا نہیں۔امام بخاری اور ابو حاتم نے کہا کہ یہ حجت نہیں۔ابو حاتم نے مزید کہا کہ اس کی حدیث لکھ لی جاتی ہے۔احمد عجلی کہتے ہیں کہ اس میں تشیع تھا اور یہ قوی نہیں۔(میزان الاعتدال)باقی ام محمد بھی مجہول الحال ہیں۔۔۔۔یہ بھی پڑھیں۔۔۔ میرے بھائیوں میری بہنوں جمعۃ المبارک کی بہت زیادہ فضیلت ہے عام دنوں کی نسبت اور خاص کر رمضان المبارک میں تو اس کی اوربھی زیادہ فضیلت ہے کیونکہ رمضان المبارک میں نوافل کا ثواب فرض کے برابر ہو جاتا ہے اور فرض کا جو ثواب ہے وہ ستر گناہ بڑھ جاتا ہے۔

تو اس لیے رمضان المبارک میں جمعۃ المبارک کی اور بھی زیادہ فضیلت بڑھ جاتی ہے کوشش کرنی ہے رمضان المبارک میں خاص کر جمعۃ المبارک کے دن زیادہ سے زیادہ نوافل ادا کرنے ہیں اور قران پاک کی تلاوت کرنی ہے اور اللہ کے حضور رو رو کر گڑگڑا کر اپنی پریشانیوں کے لیے اپنی حاجت کے لیے اپنے رزق کے لیے اپنے مسئلے کے لیے دعا کرنی ہے اور اپنی اپنے گناہوں کی معافی طلب کرنے ہے ناظرین آج جو دعا ہم آپ لوگوں کو بتانے لگے ہیں بہت ہی مختصر سی ایک لائن کی دعا ہے دعا بتانے سے پہلے آپ لوگوں سے اتنی گزارش کرنی ہے کہ خدارا پانچ وقت کی نماز کو اپنا معمول بنائیے والدین کی فرمانبرداری اور حقوق العباد کا خاص خیال رکھیں ناظرین جو بھی وظیفہ کریں کوئی بھی عمل کرے تو اس کو مکمل یقین کے ساتھ کیا کریں کہ میں یہ عمل کرنے لگا ہوں یہ عمل کرنے لگی ہوں ان شاء اللہ تعلیٰ عمل کے کرنے سے میری حاجت جو ہے وہ پوری ہو جائے گی ناظرین سیدنا انس رضی اللہ تعالی عنہ فرماتے ہیں کہ جو شخص جمعہ کے دن ستر مرتبہ یہ دعا پڑھ لے تو دو جمعہ نہ گزریں گے کہ اللہ تعالی اس کو غنی کر دے گا سبحان اللہ ناظرین اتنا مختصر سا عمل کہ جمعہ کے دن کسی بھی وقت صرف ستر مرتبہ یہ دعا ہم نے پڑھ لینی ہے دعا یہ ہے اَللّٰھُمَّ اکْفِنِیْ بِحَلَالِکَ عَنْ حَرَامِکَ وَاَغْنِنِی بِفَضْلِکَ عَمَّنْ سِوَاکْ ناظرین صرف ایک لائک کی دعا ہے ستر دفعہ پڑھنی ہے پانچ یا سات منٹ لگ جائیں گے انشاءاللہ تعالی دو جمعہ نا گزریں گے کہ اللہ تبارک و تعالی اس کو غنی کر دے گا جو جمعۃ المبارک کے دن کسی بھی جمعۃ المبارک کے دن یہ پڑھ لے گا رمضان المبارک میں خاص کر اس کی فضیلت اور بھی زیادہ بڑھ جائے گی توہم نے کوشش کرنی ہے کہ جمعہ کو ہم نے یہ عمل لازمی کرنا ہے اور اپنے دوسرے دوست احباب اور رشتہ داروں کو بھی یہ لازمی شیئر کریں تاکہ وہ بھی کرلیں کیونکہ اچھی بات کو شئیر کرنا بھی صدقہ جاریا ہے۔

About Admin

Check Also

ناخن کاٹتے وقت ’’ انا للہ وانا الیہ راجعون ‘‘ پڑھنے سے کیا معجزہ پیش آتا ہے ؟

اللہ اکبر ۔۔۔۔ انوکھاعمل اوروظیفہ ،کوئی دکھ ،بیماری یا کسی بھی قسم کی پریشانی یا …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *