Breaking News

وہ وقت جب پنجاب میں مخالف عورت کا جنازہ پڑھنے پر چالیس جوڑوں کا نکاح ”ٹوٹ “ گیا، پھر کیا ہوا؟ جان کر آپ کی بھی حیرت کی انتہا نہ رہے گی

اسلام آباد(نیوز ڈیسک) مخالف عورت کا جنازہ پڑھنے پر چالیس جوڑوں کا دوبارہ نکاح پڑھوا دیا گیا ۔تھانہ رجوعہ کے علاقہ چک نمبر 136 رجوکہ میں زرینہ بی بی نامی خاتون کا انتقال ہوا تو وہاں کے مولوی خالد نے اس کا جنازہ پڑھانے سے انکار کر دیا جس پر اس کے اہل خانہ ملحقہ گاؤں چک نمبر 136 کے مولوی کاشف شاہ کو بلوا کر لائے۔

اور اس کا جنازہ پڑھایا جس پر علاقہ میں موجود مولوی خادم نے مسجد میں اعلان کر دیا کہ جس جس نے زرینہ کا جنازہ پڑھا ہے اس کا نکاح ٹوٹ گیا اور اپنے گاؤں کے چالیس جوڑوں کے دوبارہ نکاح پڑھائے۔ خبر مقامی پولیس تک پہنچی تو انہوں نے نقص امن کے تحت مولوی سمیت دس افراد کو گرفتار کر لیا اور علاقہ مجسٹریٹ کی عدالت میں پیش کردیا جہاں علاقہ مجسٹریٹ نے ضمانت پر تمام لوگوں کو رہا کرنے کا حکم دے دیا۔اللہ کے ولی کو کبھی کوئی آفت پریشان نہیں کرتی تاوقت کہ اللہ کا حکم نہ ہو،تاریخ ایسے بے شمار واقعات کی شاہد ہے کہ اولیا اللہ کی جان کے درپے خود مصیبتوں کا شکار ہو جاتے اور انکی عقلیں خبط ہوجایا کرتی تھیں۔جب ہلاکو خان بغداد اور تبریز تک پہنچا تو اسکے ایک سپہ سالار نے مولانا روم ؒ کے شہر قونیہ پر بھی یلغار کرنا چاہی مگر مولانا روم کی جلالت نے اسکے سپاہیوں کو بے خود کردیا تھا ۔یہ ولی اللہ کی شان ہے کہ تلوار آگ اور تیر بھی اس پر اثر نہیں کرسکتی ۔تیرہویں صدی میں ہلاکو خاں کے سپہ سالار بیجو خاں نے قونیہ پر اٹیک کیا اور اپنی فوجیں شہر کے چاروں طرف پھیلا دیں تو اہل شہر تنگ آکر مولانا رومؒ کی خدمت میں حاضر ہوئے۔اور عرض کی کہ اس قہر کو شہر برباد ہونے سے روک دیں ۔ آپؒ نے ایک ٹیلے پر جو بیجو خاں کے خیمہ گاہ کے سامنے تھا جا کر مصلےٰ بچھا دیا اور نماز پڑھنی شروع کر دی۔

About Admin

Check Also

ملک بھر میں موسم کیسا رہے گا؟ محکمہ موسمیات نے خطرے کی گھنٹی بجادی

اسلام آباد(نیوز ڈیسک) محکمہ موسمیات نے بڑی خبر دے دی۔ وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *