Breaking News

ایک نہایت ہی سبق آموز کہانی

اسلام آباد(نیوز ڈیسک) ایک بڑی پرانی کہاوت ہے. کسی شخص کو ایک لڑکی سے پیار ہو گیا. اس نے لڑکی کے گھر والوں سے رشتے کی بات کی تو انہوں نے انکار کر دیا. لڑکی اور اس بندے نے آپس میں مل کر فیصلہ کیا کہ چلو بھاگ جاتے ہیں۔اور اس بندے نے لڑکی کو آدھی رات کو اس کے گھر کے قریب ایک جگہ ملنے کا بولا۔

تا کہ وہاں سے فرار ہو سکیں. رات کو جب وہ لڑکی وہاں پہنچی تو بندے نے دیکھا کہ لڑکی اپنے ساتھ ایک کپڑوں کی پوٹلی اُٹھاۓ ایک گھوڑی کی باگ تھامے آ گئی ہے. اس نے پوچھا پوٹلی میں کیا ہے تو اس لڑکی نے کہا کہ اس پوٹلی میں میرے زیورات ہیں اور گھوڑی اس لئے لائی ہوں تا کہ ہم یہاں سے جلد از جلد دور نکل جائیں. مرد نے لڑکی کو گھوڑی پر اپنے آگے بٹھایا اور وہاں سے بھاگ گئے. رستے میں ایک جگہ پانی کی ندی آ گئی انہوں نے جب گھوڑی کو پانی میں لے جانا چاہا تو گھوڑی پانی سے ڈر رہی تھی اس لیے گھوڑی ندی میں نہ اُتری. وہ مرد بڑا پریشان ہوا کہ یہ گھوڑی پانی میں کیوں داخل نہیں ہو رہی. اتنے میں لڑکی بولی کہ مجھے یاد آ گیا ہے کہ اس گھوڑی کی ماں بھی پانی سے ڈرا کرتی تھی لہٰذا یہ گھوڑی بھی پانی سے ڈرتی ہے. وہ مرد بڑا سیانا تھا. اس نے لڑکی کی یہ بات سنی اور گھوڑی کو واپسی کی راہ پر ڈال دیا اور واپس لڑکی کے گاؤں پہنچ گیا. لڑکی کو اس کے دروازے پر چھوڑ کر کہنے لگا کہ اگر جانور کی نسل اپنی فطرت نہیں بدل سکتی تو انسان کیسے فطرت بدل سکتا ہے. اگر تمہیں میں بھگا کے لے جاتا ہوں تو کل میری بیٹی بھی کسی کے ساتھ بھاگ جاۓ گی۔

About Admin

Check Also

بچے وقت سے پہلے کیوں بالغ ہونے لگے ہیں؟

اسلام آباد(نیوز ڈیسک) آج کل بچوں کا وقت سے پہلے بالغ یعنی جوان ہونے کا …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *