Breaking News

بازی پلٹ گئی ، ق لیگ نے نو منتخب وزیراعلیٰ پنجاب حمزہ شہباز کو بڑا جھٹکا دیدیا

اسلام آباد(نیوز ڈیسک) واضح رہے کہ ڈپٹی سپیکر پنجاب اسمبلی دوست محمد مزاری پر حملے میں ملوث ملزمان کی شناخت کرلی گئی، ابتدائی تحقیقات کے مطابق حملے میں چوہدری پرویزالٰہی کے امیدوار ، ان کے پرائیویٹ سکیورٹی چیف، سیکرٹری اسمبلی محمد خان بھٹی سمیت 15 اراکین پنجاب اسمبلی شامل ہیں۔

میڈیا رپورٹ کے مطابق پولیس کی ابتدائی تحقیقات کے حوالے سے بتایا گیا ہے کہ وزیر اعلی کے عہدے کے امیدوار چوہدری پرویز الٰہی کے حکم پر سابق ایس پی اور ریٹائر میجر فیصل مبینہ طور پر کچھ نجی افراد کو لے کر ایوان میں داخل ہوئے ،انہوں نے پنجاب اسمبلی کے سکیورٹی ڈیپارٹمنٹ کے عہدیداران کا لباس پہنا ہوا تھا۔ میڈیا رپورٹ کے مطابق پیشرفت سے باخبر ایک عہدیدار نے بتایا کہ تفتیش کاروں نے فوٹیج کی جانچ کی ہے جس سے معلوم ہوا ہے کہ پرویز الٰہی کے چیف سکیورٹی افسر ریٹائرڈ میجر فیصل چند افراد کے ساتھ پنجاب اسمبلی کے سکیورٹی ڈیپارٹمنٹ کے اہلکاروں کی وردی میں ایوان میں داخل ہوئے تھے۔ دوسری جانب پاکستان مسلم لیگ ق نے وزیراعلیٰ پنجاب کے الیکشن کو چیلنج کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔نجی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق چوہدری پرویز الٰہی کی زیر صدارت ق لیگ اور پی ٹی آئی کی پارلیمانی پارٹی کا اجلاس ہوا جس سے خطاب کرتے ہوئے پرویز الہیٰ کا کہنا تھا کہ 16 اپریل کو ایک بوگس، غیر آئینی اور متنازع الیکشن کروایا گیا۔اسپیکر پنجاب اسمبلی نے کہا کہ وزیراعلیٰ کے الیکشن کو گورنر اور ایڈووکیٹ جنرل پنجاب متنازع قرار دے چکے، یہ آئینی مسئلہ ہے اور جب تک واضح صورتحال سامنے نہیں آتی اس وقت تک الیکشن کو تسلیم نہیں کر سکتے۔ڈپٹی اسپیکر نے گیلری میں الیکشن کروایا جس کی کوئی آئینی حیثیت نہیں، مہمانوں کی گیلری میں میگا فون پکڑ کر تو کوئی بھی الیکشن کروا سکتا ہے۔

About Admin

Check Also

قبل از وقت انتخابات ہوئے تو کون سی جماعت فائدے میں رہے گی؟ سیاسی ماہرین نے عوام کو صاف صاف بتا دیا

اسلام آباد(نیوز ڈیسک) پاکستان میں جاری سیاسی و معاشی بحران کے تناظر میں بعض ماہرین …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *