Breaking News

سر منڈواتے ہی اولے پڑے ۔۔۔۔۔ لاہور ہائیکورٹ نے حکومت پنجاب کو ایک اور جھٹکا دے دیا

اسلام آباد(نیوز ڈیسک) پاکستان کا سب سے بڑا صوبہ پنجاب اس وقت بڑے آئینی اور انتطامی بحران کا شکار ہے حکومت پنجاب کے خلاف لاہور ہائی کورٹ میں متعدد پٹیشنز زیر سماعت ہیں جن کی آئے روز سماعت ہو رہی ہے ایسے میں پنجاب حکومت کو ایک اور بڑا دھچکا لگا ہے۔

، لاہور ہائیکورٹ نے احمد اویس کو بطور ایڈووکیٹ جنرل پنجاب کام کرنے کی اجازت دیدی۔تفصیلات کے مطابق لاہور ہائیکورٹ میں احمداویس کو بطور ایڈووکیٹ جنرل پنجاب کام سے روکنے کیخلاف درخواست کی سماعت ہوئی ، عدالت نے سیکرٹری قانون کوعہدے سے ہٹائے جانے کا آرڈر پیش کرنے کا حکم دیا۔ دوران سماعت اویس احمد کے وکیل نے موقف اختیار کیا کہ گورنرنے ایڈووکیٹ جنرل پنجاب کے عہدے پرتقرری کی،گورنر پنجاب ہی عہدے سے ہٹانے کا اختیار رکھتے ہیں،حتمی فیصلے تک انتظامی امورسے روکنے کاحکم معطل کیا جائے۔دوران سماعت احمد اویس کے وکیل نے عدالت کو بتایا کہ ایڈووکیٹ جنرل پنجاب کو زبردستی آفس سے نکالا گیا، ایڈووکیٹ جنرل پنجاب کے آفس کو تالے لگا دئیے گئے۔ عدالت نے ایڈیشنل ایڈووکیٹ کو مخاطب کرتے ہوئے ریمارکس دیے کہ آپ کے پاس یہ اختیارنہیں کہ کسی کوکام سے روک سکیں،آپ کا حق نہیں بنتا کہ انکی جگہ ذمہ داری نبھائیں، اس سسٹم کو اچھا بنائیں، چلنے دیں، کل کو آپ کو بھی سامنا کرنا پڑے گا، جس جگہ سے آپ آتے ہیں تو اس سے جانا بھی ہوتا ہے، میں نے کبھی یہ تنازعے نہیں دیکھے اب شروع ہوچکے ہیں۔عدالت نے احمد اویس کو ایڈووکیٹ جنرل پنجاب کے طور پر کام کرنے کی اجازت دیدی۔ عدالت نے حکم دیا کہ لکھ کر دیں کہ احمد اویس کوذ مہ داریاں پوری کرنے سے نہیں روکا جائے گا۔

About Admin

Check Also

‘پی ٹی آئی نے میرے خلاف سازش کی ، شاہ محمود قریشی نے اپنی ہی پارٹی پر الزام لگا دیا

اسلام آباد(نیوز ڈیسک)پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے سینئر رہنما اور سابق وفاقی وزیر …

Leave a Reply

Your email address will not be published.