Breaking News

وزیراعلیٰ پنجاب کا انتخاب!!! پرویز الٰہی کا مخالفین کو سرپرائز، بڑا اعلان کر دیا

اسلام آباد(نیوز ڈیسک) لاہور ہائی کورٹ نے اپنے تحریری فیصلے میں 16 اپریل کا حمزہ شہباز کے حلف کا فیصلہ کالعدم قرار دے دیا۔ عدالت نے ڈپٹی اسپیکر کی جانب سے گورنر کے انتخاب سے متعلق مراسلہ بھی کالعدم قرار دے دیا۔ عدالتی فیصلہ 8 صفحات پر مشتمل ہے جس میں عدالت نے حمزہ شہباز کا بطور وزیر اعلیٰ منتخب ہونے کا نوٹی فکیشن بھی کالعدم قرار دے دیا ہے۔

عدالتی فیصلے میں کہا گیا ہے کہ آج سے حمزہ شہباز اور ان کی کابینہ کے فیصلے غیر موثر ہوں گے، وہ وزیراعلیٰ پنجاب نہیں رہے اور ان کی کابینہ بھی تحلیل ہوگئی۔ عدالتی فیصلے میں کہا گیا ہے کہ صوبے اور عوامی مفاد میں کیے گئے 30 اپریل سے آج تک حمزہ شہباز اور کابینہ کے تمام اقدامات کوئی اثر نہیں پڑے گا۔ فیصلے میں کہا گیا ہے کہ گورنر پنجاب یکم جولائی شام 4 بجے اجلاس بلائیں جس میں ووٹوں کی دوبارہ گنتی کی جائے، تمام ادارے عدالتی احکامات کی پاس داری کرائیں، وزیر اعلی کے انتخاب کا عمل مکمل کیے بغیر کل کا اجلاس ملتوی نہیں ہوگا۔ عدالت نے تحریری فیصلے میں کہا ہے کہ گورنر پنجاب آرٹیکل 130 کی شق پانچ کے تحت اپنے فرائض سر انجام دیں گے، گورنر پنجاب نومنتخب وزیر اعلیٰ سے بغیر کسی ہچکچاہٹ کے حلف لیں گے، گورنر الیکشن کے کنڈکٹ کے متعلق اپنی رائے نہیں دیں گے، گورنر الیکشن پروسیس سے اگلے روز 11 بجے تک حلف لینے کا پابند ہوگا۔ جبکہ اسپیکر پنجاب اسمبلی اور وزارت اعلیٰ کے امیدوار پرویزالہیٰ نے الیکشن کے بائیکاٹ کی تردید کردی۔ اپنے بیان میں انہوں نے کہا کہ 11 ارکان بیرون ملک ہیں، انہیں واپس آنے میں وقت لگے گا، وزیراعلیٰ پنجاب کے انتخاب کے عمل کو آگے کرنے کیلئے سپریم کورٹ سے وقت مانگیں گے۔

About Admin

Check Also

قبل از وقت انتخابات ہوئے تو کون سی جماعت فائدے میں رہے گی؟ سیاسی ماہرین نے عوام کو صاف صاف بتا دیا

اسلام آباد(نیوز ڈیسک) پاکستان میں جاری سیاسی و معاشی بحران کے تناظر میں بعض ماہرین …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *